Thursday, 27 June 2013

تمہارے لیے ایک نظم


دیکھیں جانو آپ اس بار
جلدی جلدی خط لکھئے گا
ورنہ… ورنہ…!
ورنہ میں کیا کر سکتی ہوں؟
رُولوں گی بس…!
اب سے کتنے موسم پیچھے
مَیں اس کے خط پر رویا تھا
شاید پورا ہفتہ میری آنکھ میں لالی رچی رہی تھی
اور اب اتنے برسوں بعد
آج پرانے درد کھنگالے

پچھلے کتنے گھنٹوں سے
اپنی اُس نادانی پر میں
رہ رہ کر ہنس پڑتا ہوں
لیکن دُور کہیں آنکھوں مَیں
انجانا سا آنسو اب بھی
اُٹھتا ہے اور دَب جاتا ہے
چُھپ جاتا ہے
جیسے کتنے موسم پیچھے
شاید پورا ہفتہ میری آنکھ میں لالی رچی رہی تھی

Post a Comment
Related Posts Plugin for WordPress, Blogger...
Blogger Wordpress Gadgets