Monday, 23 September 2013

میں نے بویا اِک دکھ کا بیج


میں نے بویا اِک دکھ کا بیج 

جس سے کرب کی جڑیں پھوٹیں 

دَرد کا اس سے تنا نکلا 

الم کی اس کو ٹہنیاں لگیں 

جس سے رنج کی شاخیں بکھریں 

اور غموں کے پھول کھلے

Post a Comment
Related Posts Plugin for WordPress, Blogger...
Blogger Wordpress Gadgets