Friday, 5 September 2014

میرے بے خواب سے کہنا




میرے بے خواب سے کہنا
کہ اس نے میری آنکھوں میں
یہ کیسا ہجر لکھا ہے
کہ میں اب سو نہیں پاتی
میری آنکھوں میں دکھ صحرا سلگتے ہیں
مگر میں رو نہیں پاتی
میں اپنے بخت کا لکھا
لہو سے دھو نہیں پاتی

Post a Comment
Related Posts Plugin for WordPress, Blogger...
Blogger Wordpress Gadgets